بلوچستان میں کورونا کیسز کی شرح کم ہے،پرائیوٹ اسکولز فیڈریشن نے اسکولز بند کرنے کا فیصلہ مسترد کردیا

آل پاکستان پرائیوٹ اسکولز فیڈریشن کے صدر کاشف مرزا نے 7 شہروں میں اسکولز بند کرنے کے حکومتی فیصلے کو مسترد کرتے ہوئے کہا کہ بوجہ اسکولز بند نہیں ہونگے۔انہوں نے کہا کہ تعلیمی ادارے کھلے رکھیں گے بوجہ امتحانات وفاق کی مزید اسکولز بند کرنے کی تجویز مسترد کرتے ہیں۔
واضع رہے کہ عالمی وبا قرار دئے جانے والے کورونا کیسز میں اضافے کے پیش نظر پنجاب کے 7 شہروں میں تمام تعلیمی ادارے 15 دن کیلئے بند کردئے گئے ہیں۔ کاشف مرزا نے حکومت کو مشورہ دیتے ہوئے کہا کہ مائیکرو لاک ڈاؤن کا آپشن استعمال کیا جائے۔بچوں کی بڑی تعداد چائلڈ لیبر کا شکار ہورہی ہے اور اسکولز میں پچاس فیصد تعداد لڑکیوں کی ہے۔
معاون خصوصی صحت فیصل سلطان نے بتایا کہ تفریحی پارک شام 6 بجے بند کرنے کا فیصلہ کیا گیا۔ اجلاس میں بتایا گیا کہ سندھ اور بلوچستان میں کورونا کیسز کی شرح کم ہے اور ان صوبوں میں پچاس فیصد طلبہ تعلیمی اداروں میں حاضری دیتے رئینگے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں